کالعدم تنظیم جنداللہ نے زاہدان میں امام حسین رضی اللہ عنہ کے یوم ولادت پر مسجد میں دھماکوں کی ذمہ داری قبول کرلی

خودکش دھماکوں میں انقلابی گارڈز کے اہلکاروں سمیت 30افرادجاں بحق اور100سے زائد زخمی ہوگئے ہیں
زاہدان ‘ کالعدم تنظیم جنداللہ نے ایران کے شہرزاہدان میں امام حسین رضی اللہ عنہ کے یوم ولادت پرجشن کے دوران دو خود کش دھماکوں کی ذمہ داری قبول کرلی ہے ۔ جس کے نتیجے میں انقلابی گارڈز کے اہلکاروں سمیت 30افرادجاں بحق اور100سے زائد زخمی ہوگئے ہیں ۔سرکاری طورپر20افراد کے جاں بحق ہونے کی تصدیق ہوئی ہے۔ پیغمبراسلام صلی اللہ علیہ وسلم کے نواسے حضرت امام حسین رضی اللہ عنہ کے یوم ولادت کے موقع پرجشن میں سیکڑوں افراد مسجد میں موجودتھے ایک اہلکار نے بتایاکہ جامع مسجدمیں خاتون کالباس پہنے خودکش حملہ آورنے داخل ہونے کی کوشش کی تواسے روکاگیاجس پراس نے دھماکاکردیا اورلوگ امدادکے لیے دوڑے تواس دوران دوسراخودکش حملہ ہوا۔ اور اب تک جاں بحق ہونے والوں کی تعداد 30 سے زائد ہے جبکہ سرکاری طور پر صرف 20 افراد کے جاں بحق ہونے کی تصدیق ہوئی ہے۔ جاں بحق افراد میں انقلابی گارڈز کے اہلکار بھی شامل ہیں۔ عرب ٹی وی کے مطابق کالعدم تنظیم جنداللہ نے دھماکوں کی ذمہ داری قبول کرلی ہے، جنداللہ کا کہنا ہے کہ دھماکے کرکے عبدالمالک ریگی کے قتل کا بدلہ لیا گیا ہے۔